کشمیر کی صورتحال ، بین الاقوامی کانفرنس بلائینگے :سراج الحق

جماعت اسلامی پاکستان مقبوضہ کشمیر کی سنگین صورتحال کے تناظر میں بین الاقوامی کشمیر کانفرنس بلائے گی جبکہ عید کے بعد پاکستان بھر میں کشمیر بچاؤ مہم شروع کرے گی اس مہم کے تحت چترال سے کشمیر تک ’’کشمیر بچاؤ ‘‘ریلیاں منعقد کی جائیں گی ،جماعت اسلامی مشاورت کے بعد لائن آف کنٹرول کراس کرنے کا پروگرام بھی مرتب کرے گی ، ان خیالات کا اظہار سراج الحق نے مقبوضہ کشمیر کی سنگین صورتحال کے تناظر میں کل جماعتی حریت کانفرنس آزادکشمیر شاخ کے رہنماؤں کے ساتھ مشاورتی اجلاس میں کیا، امیر جماعت کی میزبانی میں مشاورتی اجلاس میں جماعت اسلامی کے سیکرٹری جنرل امیر العظیم،جماعت اسلامی آزاد کشمیر کے امیر ڈاکٹر خالد محمود،جماعت اسلامی آزاد کشمیر کے سابق امیر عبد الرشید ترابی دیگر بھی موجود تھے ،مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے سینیٹر سراج الحق نے حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا ہے کہ مسئلہ کشمیر پر بین الاقوامی کانفرنس بلائی جائے ، اگر حکومت پاکستان نے مسئلہ کشمیر پر بین الاقوامی کانفرنس نہ بلائی تو جماعت اسلامی کانفرنس بلائے گی ، عبد الرشید ترابی نے کہا کہ جماعت اسلامی نے ہمیشہ کشمیریوں کی پشت بانی کی 1990 میں بڑی تعداد میں ہمارے بھائی مقبوضہ خطے سے آزاد خطے میں آئے قاضی حسین احمد نے 1990ء میں اس صورتحال میں متحرک کردار ادا کیا اور اب سینیٹر سراج الحق کشمیر کاز کے لیے کوشاں ہیں ،حریت کانفرنس کے رہنماء سید عبد اﷲ گیلانی نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت نے نئی فوج داخل کر کے کشمیریوں کو محصور کر دیا ہے ، محمد فاروق رحمانی نے کہا کہ اگر پاکستان سویا رہا تو بھارت آنے والے وقت میں جموں کشمیر کو مزید تقسیم کرے گا ، محمود ساغر نے گلہ کیا کہ کشمیر کی آزادی کے لیے آزاد حکومت کا کردار کیا ہے ، شیخ تجمل السلام نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی تعدادپیراملٹری فورسز سمیت آٹھ لاکھ نہیں بلکہ پندرہ لاکھ ہو چکی ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں