قوم کے اصلی ہیرو۔۔ تحریر نوشابہ یعقوب راجہ پیرس

قوم کے اصلی ہیرو۔۔ تحریر نوشابہ یعقوب راجہ پیرس

کالم نویس اینڈ ریزیڈنٹ ایڈیٹر سویرا نیوز:

نوشابہ یعقوب راجہ

کورونا وائرس :
فرانس میں دوران ڈیوٹی کورونا وائرس کا شکار پہلا ڈاکٹر
Dr Jean-Jacques Razafindranazy
زندگی کی بازی ہار گیا۔
فرانس کے وزیر صحت اولیوئے ویرون Olivier Veran
نے کورونا وائرس سے متاثرہ پہلے فرانسیسی ڈاکٹر کی موت کی تصدیق کردی ۔

آجکل پوری دنیا میں جہاں ہر جگہ لوگ اپنی اپنی جان بچانے کی سوچ رہے ہیں وہاں کچھ لوگ اپنی زندگی کو داو پر لگا کر انسانیت کی خدمت میں پیش پیش ہیں۔میرا اور تمام انسانیت کاسلام ہےان ڈاکٹرز اور میڈیکل سٹاف کو جو پوری دنیا میں اس آفت کی گھڑی میں اپنی جانوں کی پرواہ کیے بغیر انسانیت کی خدمت کر رہے ہیں،کئی لوگ خدمت کرتے کرتے اپنی جانیں گنوا چکے ہیں وہ دنیا کے کسی ملک سے تعلق رکھتے ہوں وہ تمام انسانیت کے محسن اور اصل ہیرو ہیں۔وقت گزر جاتا ہے زندگی اور موت کا وقت مقرر ہوتا ہے مگر بامقصد موت انسان کو امر کر دیتی ہے۔اور ایسے دلیر اور انسانیت کے محسنوں کا نام تاریخ بہت عزت اور وقار سے لیتی ہے۔

خدا کے عاشق تو ہیں ہزاروں بنوں میں پھرتے ہیں مارے مارے
میں اس کا بندہ بنوں گا جس کو خدا کے بندوں سے پیار ہو گا

دنیا میںکرونا وائرس کی بدولت موت کے سائے منڈلا رہے ہیں ہر روز سینکڑوں افراد کی لاشیں اٹھائی جا رہی ہیں جو کرونا وائرس کی بدولت جانبر نہ ہو سکے اور ایک مخصوص پلاسٹک میں لپیٹ کر ان کی لاشیں دفنائی اور بعض مقامات پر جلانے کی بھی اطلاعات آ رہی ہیں کیونکہ شرع اموات زیادہ ہوتی جا رہی ہے ۔ڈاکٹرز کہہ رہے نہ لاش گھر
والے لے کر جا سکتے ہیں اور نہ ہی غسل اور نہ ہی کفن پہنایا جا سکتا ہے صرف ایک مخصوص پلاسٹک میں لپیٹ کر ان کی لاشیں دفنائی جائیں گی۔انسان کا جسم ختم ہونا ہی ہے اسے مٹی میں مٹی ہونا ہے مگر اصل اعمال ہیں جن کا حساب ہونا ہے۔

روز ازل توں ننگے پنڈے آوندا اس جہانے
بندہ اک کفن دی خاطر کناں پینڈا کردا
اللہ ہو ۔اللہ ہو
لیکن اتنی مسافت کے بعد وہ کفن بھی نصیب میں ہے کہ نہیں اس کی بھی گارنٹی نہیں ہے۔یہ حقیقت چیخ چیخ کر بتا رہی ہے سب مایا ہے دنیا کی مال و دولت،حسب نصب،عہدہ ،مرتبہ سب کا سب مایا ہے یہ دنیا عارضی ہے امتحان گاہ ہے کوشش کریں اسے عارضی سمجھیں اور اپنی اپنی باری کا انتظار باوقار طریقے سے کریں۔دنیا میں ایسے رہیں جیسے کوئی مسافر سستانے کے لیے کسی جگہ آرام کرتا ہے۔اور اسے وہاں سے جانا ہوتا ہے اس دنیا کی حیثیت اتنی ہی ہے۔جتنی زندگی گزاریں کوشش کریں اللہ کے بتائے ہوئے طریقے صراط مستقیم پر چلنے کی کوشش کریں اور جو درد دل دے کر ہمیں بھیجا گیا ہے اس درس کو سامنے رکھتے ہوئے انسانیت کی خدمت کریں ۔

مجھے آپکو ایک دن مرنا ہے اپنے وعدے پہ واپس پلٹنا ہے دعا کریں جب موت آئے تو ایمان کیساتھ اور بامقصد آئے کہ اپنے اللہ سے ملیں تو ہمارا استقبال محبت سے کیا جائے کہ ہمارا خلیفہ اپنی باعزت سروس کے بعد واپس لوٹ کر آگیا ہے۔ آمین ثم آمین

اپنا تبصرہ بھیجیں